مسرت عالم کہاں ہیں؟سی پی او بھی بے خبر

جانکاری فراہم کرنے کیلئے دو روزہ عدالتی مہلت

عدالتی احکامات کے باوجودمسلم لیگ کے محبوس چئیرمین مسرت عالم بٹ کوجمعرات عدالت میں پیش نہیں کیا گیاجبکہ عدالت میں اس بات کا  سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے کہ چیف پرازیکیوٹنگ آفیسر کو یہ معلوم ہی نہیں ہے کہ مسرت عالم بٹ کہاں بند رکھے گئے ہیں۔عدالت نے چیف پرازیکیوٹنگ آفیسر کو مسرت عالم کے بارے میں تمام جانکاری فراہم کرنے کیلئے دو روز کی مہلت دی۔اس دوران عدالت نے ایس ایس پی سرینگر کی عدالت میں غیر حاضری کا سنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے انہیں سوموارعدالت میں حاضر ہونے کے احکامات صادر کئے ۔واضح رہے کہ مسرت عالم بٹ کو12اپریل عدالتی احکامات پر ڈسٹرکٹ جیل کھٹوعہ سے رہا کرنے کے فوراً بعد پولیس نے دوبارہ گرفتار کرلیا۔فسٹ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سرینگر کی عدالت میں جمعرات مسرت عالم بٹ کے کیس کی شنوائی ہوئی۔مسرت عالم بٹ کے وکیل ایڈوکیٹ شفقت نے عدالت کو بتایا کہ ان کے مئوکل کو جان بوجھ کر عدالت کے سامنے پیش نہیں کیا جارہا ہے۔ایڈوکیٹ شفقت نے عدالت کو مزید بتایا کہ مسرت عالم پر لگائے گئے نظر بندی کے7 احکامات پہلے ہی عدالت نے کالعدم قرار دئے ہیں لیکن پولیس نے انہیں رہا کرنے کی بجائے کونٹر انٹیلی جینس کشمیر’ سی آئی کے’ جموں میں نظر بند کردیا جو قانون کی صریحاً خلاف ورزی اور عدالتی احکامات کی توہین ہے ۔انہوں نے عدالت کو بتایا کہ اگر ان کے مئوکل کو رہا نہیں کیا جارہا ہے لیکن کم سے کم عدالت میں پیش تو کیا جائے اور دوبارہ گرفتارکرنے  کے وجوہات سے باخبر کیا جائے۔اس موقع پر عدالت میں موجود چیف پرازیکیوٹنگ آفیسر نے عدالت میں یہ انکشاف کیا کہ انہیں معلوم ہی نہیں ہے کہ مسرت عالم کہاں ہیں۔مذکورہ آفیسر نے عدالت کو مزید بتایا کہ پرازیکیوشن کودو دن کی مہلت دی جائے تاکہ وہ مسرت کے بارے میں تمام جانکاری عدالت کو فراہم کریں۔فسٹ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج شکتی گپتا نے پرازیکیوشن کو دو روز کی مہلت دیتے ہوئے احکامات صادر کردئے کہ سوموار کو مسرت عالم بٹ کے بارے میں عدالت کو مفصل جانکاری فراہم کی جائے۔ اس دوران جج شکتی گپتا نے ایس ایس پی سرینگر کی عدالت میں غیر حاضری کا سنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے انہیں بھی سوموارعدالت میں حاضر ہونے کے احکامات صادر کئے۔واضح رہے کہ گذشتہ سماعت کے دوران عدالت نے مسرت عالم بٹ کو عدالت میں پیش نہ کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی سرینگر اور ڈی ایس پی (ڈی آر ) کو وجہ بتائو نوٹس جاری کی تھی ۔جج نے دونوں افسران کو ہدایات جاری کئے تھے کہ مسرت عالم کو عدالت میں پیش نہ کرنے کی وجوہات بیان کرنے کیلئے عدالت میں حاضر ہوجائیں۔عدالتی احکامات کے پیش نظر ڈی ایس پی(ڈی آر) ریاض احمد عدالت میں جمعرات پیش ہوگئے تاہم ایس ایس پی سرینگر جاوید ریاض بیدار غیر حاضر رہے۔

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: