وادی میں پولنگ کا آخری مرحلہ آج

اسمبلی انتخابات کے چوتھے مرحلہ میںآج ریاست کی18نشستوں کیلئے ووٹ ڈالے جارہے ہیں جن میں وادی کی16اور جموں کی2نشستیں شامل ہیں۔ان نشستوں پر182امیدوار انتخاب لڑرہے ہیں،جن میں وزیراعلیٰ عمر عبداللہ،چار وزراء اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے سرپرست اعلیٰ مفتی محمد سعید شامل ہیں۔آج سرینگر کی آٹھ،شوپیان کی دو اور اننت ناگ کی چھ نشستوں پر پولنگ ہوگی، اسکے علاوہ جموں میں بھی دو نشستوں پر ووٹ ڈالے جائیں گے۔ انتظامیہ نے پْرامن انتخابات منعقد کرانے کی غرض سے 20ہزار نیم فوجی اہلکار تعینات کئے ہیں جبکہ سرینگر میں موبائل ووٹنگ پرروک لگانے کیلئے تمام آٹھ نشستوں کے لئے 8اسکواڈ تشکیل دئے گئے ہیں۔

اس انتخابی مرحلے کی خاص بات یہ ہے کہ وزارت اعلیٰ کی کرسی کیلئے ریاست کی دوبڑی علاقائی پارٹیوں نیشنل کانفرنس اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار عمر عبداللہ اور مفتی محمد سعید بالترتیب سونہ وار اوراسلام آباد(اننت ناگ) انتخابی حلقوں سے اپنی اپنی سیاسی قسمت آزمارہے ہیں۔یاد رہے کہ182 امیدواروں میں جو دیگر لیڈران قسمت آزمائی کررہے ہیں اْن میں علی محمد ساگر(این سی) ،الطاف بخاری (پی ڈی پی)،پیرزادہ محمد سعید(کانگریس)،غلام احمد میر(کانگریس) ،ناصر اسلم وانی(این سی)،آسیہ نقاش(پی ڈی پی)،خورشید عالم (پی ڈی پی)،ڈاکٹر حنا بٹ(بی جے پی) اورمبارک گل (این سی) قابل ذکر ہیں۔قابل ذکر ہے کہ حلقہ انتخاب بٹہ مالو میں 16امیدوار اپنی سیاسی قسمت آزمائی کررہے ہیں جبکہ حلقہ انتخاب خانیار میں 6، سونہ وار میں 16، حضرتبل میں12، عیدگاہ میں 8، حبہ کدل میں 11اورحلقہ انتخاب امیرا کدل میں 14امیدوار اپنی سیاسی قسمت آزمائی کررہے ہیں۔ اسلام آباد میں 8، شانگس میں 9، بجبہاڑہ میں 5اورحلقہ انتخاب وچی میں 10امیدوارمیدان میں ہیں۔واضح رہے کہ ان 18نشستوں کیلئے 1473000 رائے دہندگان1890پولنگ مراکز پر اپنے حق رائے دہی کا استعمال کریں گے۔ اس دوران انتظامیہ نے حالیہ عسکری حملوں کے پیش نظر دوسرے مرحلے کے لیے حفاظتی انتظامات مزید سخت کردئے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سرینگر،اسلام ا?باد اور شوپیان اضلاع میں پْرامن انتخابات منعقد کرانے کی غرض سے 20ہزار نیم فوجی اہلکارسنیچرکو ہی تعینات کئے گئے۔ذرائع کے مطابق یہ اہلکار پہلے سے ہی تعینات سی آر پی ایف اور جموں کشمیر پولیس کی تعداد میں اضافہ ہے۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ انہوں نے موبائل ووٹروں پر نظر گذر رکھنے کیلئے 8اسکواڈ تشکیل دئے ہیں۔ہر ایک اسکواڈ کی سربراہی ایک مجسٹریٹ کرے گا اور اس کا معاون ایک پولیس آفیسر ہوگا۔ دریں اثناء ووٹنگ مشینوں اور انتخابی عملے کو اپنے اپنے مقامات تک پہنچایا گیا ہے۔ پہلے تین مراحل کی طرح چوتھے مرحلے میں بھی ووٹنگ صبح8بجے شروع ہوکرچار بجے کو اختتام ہوگی۔واضح رہے کہ ان 18نشستوں میں سے فی الوقت نیشنل کانفرنس 9نشستوں پر ،6 پر پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی ،کانگریس2اورایک نشست پر پینتھرس پارٹی پرقابض ہے۔

 

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: