سبکدوشی کے بعد دوبارہ ملازمت کررہے لوگوں کی چھٹی

ریاست جموں و کشمیر کے وزیرا علیٰ مفتی محمد سعید نے ایک انتہائی اہم فیصلے کے تحت اْن تمام ملازمین کو برطرف کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں جنہیں نوکری سے سبکدوش ہونے کے باوجودمختلف سرکاری محکموں،پبلک سیکٹر اداروں، بورڈوں اورخود مختار اداروں نے دوبارہ ملازمت فراہم کی ہے۔ اس دوران ریاست میں کیجول اور سیزنل لیبروں کی تعیناتی پر بھی مکمل پابندی عائد کی گئی ہے۔ واضح رہے کہ ریاست میں کیجول اور سیزنل لیبروں کی تعیناتی کا عمل2005میں شروع کیا گیا تھا اور ریاست کی زمام کار مفتی محمد سعید ہی سنبھال رہے تھے۔

سرکاری ترجمان کے مطابق وزیر اعلیٰ نے یہ ا قدم ریاست کو اقرباء پروری سے نجات دلانے اور انتظامیہ میں نئی روح پھونکنے کے لئے اْٹھایا ہے۔ترجمان کے مطابق وزیر اعلیٰ نے سبھی سرکاری محکموں میں ریٹائرمنٹ کے بعددوبارہ تعینات کئے گئے ملازمین کی ملازمتوں کو منگل یعنی17مارچ سے فی الفور منسوخ کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں۔یہ حکم نامہ سبھی سرکاری محکموں، پبلک سیکٹر اداروں، کارپوریشن اور خود مختار اداروں میں کسی بھی سکیم کے تحت بغیر بھرتی عمل کے کئے گئے انتظامات، حتیٰ کہ کنٹریکچول بنیادوں پرتعینات کئے گئے ملازمین پر بھی نافذ العمل ہوگا۔اس سلسلے میں عمومی انتظامی محکمہ کے کمشنر سیکریٹری ایم اے بخاری نے ایک آرڈر زیر نمبر 384-GAD/2015جاری کیا ہے۔آرڈر میں یہ واضح کیا گیا ہے کہ تمام سرکاری محکموں،پبلک سیکٹر اداروں، بورڈوں اورخود مختار اداروں میں جن افراد کو نوکری سے سبکدوش ہونے کے بعددوبارہ ملازمتیں فراہم کی گئی ہیں ،انہیں منگلوار یعنی 17مارچ سے ہی برطرف کیا جارہا ہے۔واضح رہے کہ این سی کانگریس مخلوط سرکار نے 200سے زائدسبکدوش ملازمین/ افسران کو دوبارہ مختلف سرکاری محکموں/کارپوریشنوں اور خود مختار اداروں میں متعدد عہدوں پر تعینات کیا ہے جن کی تنخواہوں پر کروڑوں روپے کا خرچہ آیا ہے۔سابق حکومت نے خود قانون ساز کونسل میں اس بات کا اعتراف کرتے ہوئے اعتراف کیا تھا کہ سبکدوش افسران/ ملازمین کی دوبارہ تقرریاں ایک مجبور ی تھی۔اس دوران وزیر اعلیٰ مفتی محمد سعید نے ریاست میں کیجول اور سیزنل لیبروں کی تعیناتی پر بھی مکمل پابندی عائد کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں۔اس سلسلے میں محکمہ خزانہ کے پرنسپل سیکریٹری بی بی ویاس نے ایک آرڈر زیر نمبر43-F/2015میں واضح کیا ہے کہ مجاز اتھارٹی کی طرف سے منظوری ملنے کے بعدتمام سرکاری محکموں،پبلک سیکٹر اداروں، بورڈوں اورخود مختار اداروں کیلئے یہ احکامات جاری کئے جارہے ہیں کہ کیجول اور سیزنل لیبروں کی بھرتی پر منگل سے ہی پابندی عائد کی جارہی ہے۔آرڈر میں بتایا گیا ہے کہ مجاز اتھارٹی کی طرف سے منظوری ملنے کے بعد یہ احکامات جاری کئے جارہے ہیں کہ2005سے تاحال مختلف سرکاری حکمناموں کے تحت جن حکام کو ایسی بھرتیاں عمل میں لانے کا اختیار دیا گیا تھا،اْن سے یہ اختیارات فوری طور واپس لئے جارہے ہیں اور اب سے کسی بھی عہدیدار کو کسی بھی سطح پر کیجول یا سیزنل لیبروں کی تعیناتی کا اختیار نہیں ہوگا۔

 

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

w

Connecting to %s

%d bloggers like this: