چیف سیکریٹری کی درخواستِ سبکدوشی منظور

Khandeyحکومت جموں و کشمیر نے چیف سیکریٹری محمد اقبال کھانڈے کی رضاکارانہ سبکدوشی کی درخواست منظور کی ہے۔اس سلسلے میں بدھ کی شام احکامات جاری کئے گئے۔ ایک سرکاری بیان کے مطابق کل ہند سروس رولز 1958 کے رول 16 کی ذیلی شق (2) کی روسے محمد اقبال کھانڈے آئی اے ایس ( جے کے 1978) چیف سیکریٹری ریاست جموں و کشمیر کی انڈین ایڈمنسٹریٹیو سروس سے رضاکارانہ سبکدوشی کی درخواست 31 اگست 2015 ( بعد دوپہر) سے منظور کی جاتی ہے۔کھانڈے کو عمر عبداللہ کی سربراہی والی سرکار کے دوران 2013 میں ریاست کا چیف سیکریٹری تعینات کیا گیاتھا۔چیف سیکریٹری اور مفتی سعید کی سربراہی والی سرکار کے بیچ اختلافات بامِ عروج کو پہنچنے کے بعد چیف سیکریٹری محمد اقبال کھانڈے نے بالآخر 25اگست کو اپنی ریٹائرمنٹ سے ا ڑھائی ماہ قبل ہی نوکری سے رضا کارانہ سبکدوشی کی درخواست دے دی۔کھانڈے نے 25اگست کو ہی اعتراف کیا کہ اْس نے سرکار کو رضاکارانہ سبکدوشی کیلئے درخواست روانہ کردی ہے۔اْن کا کہنا تھا کہ ’’24اگست کی صبح میں نے درخواست پیش کی ہے اور جواب کا منتظر ہوں‘‘۔سرکار سے کوئی جواب نہ ملنے کے بعد کھانڈے نے اپنے فیصلے کو سرکار کی منظوری سے مشروط نہ کرتے ہوئے گذشتہ ہفتے کہا تھا’’یکم اکتوبرسے آپ مجھے سکریٹریٹ میں نہیں دیکھیں گے‘‘۔ اقبال کھانڈے اور مفتی سعید کی سرکار کے مابین روزِ اول سے ہی کھینچ تان شروع ہوگئی تھی اور کوششوں کے باوجود بھی انہیں قریب نہیں کیا جاسکا۔26اگست کو معاملہ تب اور بگڑ گیا کہ جب اقبال کھانڈے نے ایک کابینہ وزیر سے کہا تھا کہ موجودہ سرکار کو ایک چیف سکریٹری کی نہیں بلکہ ایک سٹونو گرافر کی ضرورت ہے جو اْنہیں منظور نہیں ہے۔ اختلافات کا ماحول پہلے ہی پیدا ہوگیا تھا اور یہی وجہ ہے کہ کھانڈے نے ریاستی کابینہ کے گذشتہ دو اجلاسوں میں شرکت نہیں کی۔یاد رہے کہ اقبال کھانڈے نے ایک قریبی رشتہ دار کی موت کی وجہ سے 19اگست کو ہونے والے کابینہ اجلاس کو ملتوی کرنے کی بھی درخواست کی تھی تاہم حکومت نے اس کی درخواست کو رد کرکے کابینہ اجلاس ملتوی نہیں کیا۔ کھانڈے نے اس ضمن میں چند روز قبل بتایا ’’میرے بھائی کا دس سالہ پوتا رحمت حق ہوا اور میں نے اسی وجہ سے وزیراعلیٰ سے کابینہ میٹنگ ایک دن کیلئے مؤخر کرنے کی استدعا کی تھی تاہم وزیر اعلیٰ نے میٹنگ منعقد کرنے کیلئے بی آر شرما پرنسپل سیکریٹری پلاننگ کو میری جگہ کابینہ سیکریٹری کے بطور تعاون پیش کرنے کی ہدایت دی اور یہی بات میری سبکدوشی کی خواہش کی وجہ بنی کیونکہ وزیراعلیٰ کے )اس فیصلے سے( چیف سیکریٹری کے عہدے کا وقار برقرار رکھنا)میرے لئے ناممکن بن گیا اور میرے لئے ایسی صورتحال کے ساتھ برقرار رہنا نامناسب تھا ‘‘۔معلوم ہوا ہے کہ چند سینئر وزراء نے محمد اقبال کھانڈے کے ساتھ رابطہ کیا تھا لیکن وہ اپنے فیصلے پر قائم رہے۔اْن کا کہناتھا’’ یہ چھوٹا معاملہ ہے ،مجھے نہیں معلوم اسے بڑا کرکے کیوں پیش کیا جارہا ہے ،مجھے آنے والے تین مہینوں میں توسبکدوش ہونا ہی تھا ‘‘۔یاد رہے کہ کھانڈے نومبر 2015کو سبکدوش ہونے والے تھے۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ 1978بیچ کے59سالہ آئی اے ایس افسر اقبال کھانڈے اس سے پہلے پی ڈی پی۔کانگریس حکومت کے دوران وزیر اعلیٰ مفتی محمد سعید کے پرنسپل سیکریٹری بھی رہ چکے ہیں۔

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

w

Connecting to %s

%d bloggers like this: