انٹرنیٹ پر غلط افواہیں،کیس رجسٹر

معروف عسکری کمانڈربرہان مظفر وانی اور اْس کے ساتھیوں کی ہلاکت کے بعد جہاں وادی میں سخت ترین کرفیو نافذ ہے اور ہلاکتوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے وہیں دوسری طرف جموں اور بیرون ریاست مقیم چند کشمیری پنڈتوں نے غلط افواہیں پھیلاکر کشمیری عوام کو بدنام کرنے کا سلسلہ شروع کیا ہے۔پولیس نے اس ضمن میں ایک کیس درج کرلیا ہے۔سماجی نیٹ ورک پر انتہائی سرگرم ایک کشمیری پنڈت اشوک کول نے ذرائع کے حوالے سے لکھا ہے ’’کشمیر کے کسی گاؤں میں دو پنڈتوں کو مارا گیا ہے اور کئی مکانوں کو جلایا گیا ہے‘‘۔انہوں نے یہ بھی لکھا ہے کہ انٹرنیٹ سروس معطل کی گئی ہے۔واضح رہے کہ یہ وہی اشوک کول ہے جس نے دو سال قبل کہا تھا کہ ہندوارہ میں ایک پنڈت لڑکی کی عصمت لوٹ لی گئی۔اس دوران ایک اورشخص ونود پنڈت نے سماجی نیٹ ورک ٹویٹر پر ایک ٹویٹ کیا ہے ’’میں کاکرن کے ایک مندر کے اندر ہوں۔ہمیں لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے گھیرلیا ہے جو مسلسل مندر پر پتھروں سے حملہ کررہے ہیں۔ کوئی فوج یا سکیورٹی موجود نہیں ہے‘‘۔ معلوم رہے کہ ونود پنڈت آل پنڈت مائیگرنٹ کارڈی نیشن کمیٹی(APMCC) کے چیئرمین ہیں۔ اْس کے ٹویٹر کے جواب میں سابق ناظم اطلاعات فاروق رینزو نے لکھا ہے’’بہت افسوس ہے اور میں ابھی حکام کے ساتھ رابطہ کروں گا کہ وہ آپکو اور مندر کو حفاظت فراہم کریں،کوئی بھی نقصان کشمیر کیلئے کسی بڑی نقصان کا سبب بن سکتا ہے ‘‘۔اشوک کول نامی اس پنڈت نے سماجی نیٹ ورک پر حقائق کا سامنے کرنے کے بعد لکھا ہے ’’میں نے غلط خبر کی تشہیر کی تھی جس کیلئے میں معذرت خواہ ہوں‘‘۔ذرائع کے مطابق کشمیری عوام کی طرف سے سخت ناراضگی کے بعد انتظامیہ نے اس معاملے کا سنجیدہ نوٹس لیا ہے اور غلط افواہیں پھیلانے کے مرتکب افراد کے خلاف ایک ایف آئی آر درج کرلیا ہے۔ پولیس نے اس ضمن میں دو کشمیری پنڈتوں کے مارنے کی غلط افواہ پھیلانے کے تناظر میں اشوک کول کے خلاف ایک کیس زیر نمبر505B2/2016/44کوٹھی باغ تھانے میں درج کرلیا ہے۔پولیس کے ایک عہدیدار نے بتایا’’ہم نے غلط افواہ پھیلانے کی پاداش میں اشوک کول کے خلاف ایک کیس درج کرلیا ہے ‘‘۔

Advertisements

One Response to انٹرنیٹ پر غلط افواہیں،کیس رجسٹر

  1. Jimmy نے کہا:

    There is certainly a lot to know about this subject.
    I like all of the points you’ve made. http://www.yahoo.net

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: